ہفتہ25؍رمضان المبارک 1442ھ 8؍ مئی 2021ء

بھارت کی جانب سے دریائے ستلج میں زہریلا پانی چھوڑنے کا انکشاف

ذرائع ابلاغ پر جاری ایک رپورٹ کے مطابق بھارت نے دریائے ستلج میں مبینہ طور پر زہریلا آلودہ پانی چھوڑ دیا۔

زہریلا پانی بہاولنگر میں دریائے ستلج کے مقام سلیمانکی ہیڈ ورکس میں چھوڑا گیا جس سے کئی مچھلیاں و دیگر آبی حیات ہلاک ہوگئے۔

ڈسٹرکٹ آفیسر ماحولیات بابر خان نے نجی نیوز ٹی وی کو بتایا کہ بھارت کی جانب سے ہر سال جنوری اور فروری کے دوران دریائے ستلج میں چھوڑے جانے والے پانی میں مبینہ طور پر زہریلا کیمیکل ملا ہوا ہوتا ہے۔

زہریلے پانی مچھلیاں ہلاک ہوکر کنارے پر آگئیں۔ مقامی مچھلی فروش اور دیگر لوگ کناروں پر پڑی مردہ مچھلیاں اٹھانے لگے۔

رپورٹ کے مطابق مردہ مچھلیاں بازار میں فروخت ہونے کا خدشہ پیدا ہوگیا۔

The post بھارت کی جانب سے دریائے ستلج میں زہریلا پانی چھوڑنے کا انکشاف appeared first on Urdu News – Today News – Daily Jasarat News.

بشکریہ جسارت
You might also like

Comments are closed.