اتوار22؍ رجب المرجب 1442ھ 7؍مارچ2021ء

فوج کو سیاست میں مت گھسیٹیں: ڈی جی آئی ایس پی آر

پی ڈی ایم اور اسٹیبلشمنٹ کے بیک ڈور رابطے سے متعلق سوال پر ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ کچھ دنوں سے اس بارے میں کافی چہ میگوئیاں کی جارہی ہیں، میں پھر واشگاف الفاظ میں کہہ دینا چاہتا ہوں کہ سیاست سےافواج کا کوئی تعلق نہیں۔

انہوں نے کہا کہ کسی قسم کےبیک ڈور رابطے یا چینل اس چیز کیلئے استعمال نہیں کیےجارہے، قیاس آرائیاں کرنےوالوں سے پھر کہوں گا فوج کوسیاست میں مت گھسیٹیں، ہمارے پاس داخلی وخارجی سلامتی کا بڑا فریضہ ہے جسے بہ خوبی ادا کررہے ہیں۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ بغیر شواہد اور تحقیق اس بارے میں بات کرنا کسی کو بھی سوٹ نہیں کرتا، اس قسم کی قیاس آرائیوں کو بند ہونا چاہیے، اس بارے میں کمنٹس کرنے والوں کے پاس کوئی ثبوت ہے تو سامنے لے آئیں، دکھا دیں کون کس کو کال کررہا ہے،کس سے بات کررہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس طرح کی کوئی چیز نہیں ہورہی ہے، میں پھر درخواست کرتاہوں کہ ان معاملات میں ہمیں نہ گھسیٹا جائے۔

میجر جنرل بابر افتخار نے کے ٹو مہم جوئی کے دوران لاپتہ کوہِ پیماؤں کے حوالے سے کہا کہ علی سدپارہ قوم کے ہیرو ہیں، کوہ پیماؤں کےسرچ آپریشن میں کوئی کمی نہیں آنے دیں گے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ بھارت دنیا میں بہت حد تک بے نقاب ہو چکا ہے، پچھلی پریس کانفرنس میں بہت سے شواہد سامنے رکھے۔

پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل بابر افتخار کا کہنا ہے کہ چین نے افواج پاکستان کے لیے کورونا وائرس کی ویکسین کا عطیہ دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاک فوج پہلی غیر ملکی فوج ہے جسے چین نے کورونا ویکسین کا عطیہ دیا۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ سب کو معلوم ہے کورونا سے پوری دنیا متاثر ہوئی، پاکستانی قوم نے کورونا کا کامیابی سے مقابلہ کیا، ہیلتھ کیئر ورکرز نے کورونا وائرس سے مقابلے میں قوم کی بھرپور مدد کی۔

بشکریہ جنگ
You might also like

Comments are closed.