منگل3؍رجب المرجب 1442ھ 16؍فروری 2021ء

حادثے میں 4 ہلاکتیں، کشمالہ طارق کے بیٹے کے لائسنس کی تصدیق کا حکم

اسلام آباد میں 4 افراد کی ٹریفک حادثے میں ہلاکت کے معاملے پر سابق رکنِ قومی اسمبلی اور موجودہ وفاقی محتسب برائے انسدادِ ہراسانی کشمالہ طارق کے بیٹے اذلان کی عبوری درخواستِ ضمانت پر سماعت کے دوران اسلام آباد کی عدالت نے ملزم کے ڈرائیونگ لائسنس کی تصدیق کرانے کا حکم دے دیا۔

اسلام آباد کی عدالت کے ایڈیشنل سیشن جج شیخ محمد سہیل نے کیس کی سماعت کی۔

ملزم کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ حادثے میں جاں بحق ہونے والے 4 افراد میں سے 3 کے لواحقین سے راضی نامہ ہو چکا ہے۔

وفاقی محتسب کشمالہ طارق کا بیٹاسری نگر ہائی وے پر ہوئے حادثے کے مقدمے میں نامزد ہوگیا۔

ملزم کے وکیل نے استدعا کی کہ قابلِ ضمانت دفعات کے تحت مقدمہ درج ہے، لہٰذا ملزم کی ضمانت منظور کی جائے۔

سرکاری وکیل نے ضمانت کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ ابھی ملزم کے پیش کردہ لائسنس کی تصدیق نہیں ہوئی ہے، 3 افراد کی حد تک راضی نامہ ہوا ہے تو ورثاء کے بیانِ حلفی سامنے نہیں آئے۔

سرکاری وکیل نے استدعا کی کہ ایک متوفی کے ورثاء سے ملزم کا کوئی راضی نامہ نہیں ہوا ہے، 4 افراد کی جان گئی ہے، ضمانت کی درخواست منسوخ کی جائے۔

جج نے حکم دیا کہ پولیس ملزم کی جانب سے پیش کردہ لائسنس کی آج ہی تصدیق کرائے۔

اسلام آباد کی عدالت نے کیس کی سماعت آج 2 بجے دوپہر تک کے لیے ملتوی کر دی۔

بشکریہ جنگ
You might also like

Comments are closed.