جمعرات12؍رجب المرجب 1442ھ25؍فروری 2021ء

پی ڈی ایم کے مشترکہ امیدوار یوسف رضا گیلانی سینیٹ انتخاب کیلیے اہل قرار

اسلام آباد: الیکشن کمیشن نے تحریک انصاف کے اعتراض مسترد کرتے ہوئے سابق وزیراعظم اور سینیٹ الیکشن میں پی ڈی ایم کے مشترکہ امیدوار یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ انتخاب کیلیے اہل قرار دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں سکروٹنی کا عمل مکمل ہوگیا ہے اور یوسف رضا گیلانی اور حکومتی امیدوار عبدالحفیظ شیخ میں سخت مقابلہ متوقع ہے جبکہ اسلام آباد کی دو نشستوں پر 10 میں سے 9 امیدواروں کے کاغذات منظور کرلیے گیے۔

الیکشن کمیشن کے مطابق سینیٹ کی جنرل نشست پر تحریک انصاف کے عبدالحفیظ شیخ، فرید رحمان اور سید علی بخاری کے کاغذات منظور ہوئے جبکہ خواتین کی نشست کیلیے فوزیہ ارشد اور منیرہ جاوید میدان میں ہیں۔

واضح رہے گزشتہ روز پی ٹی آئی کے فرید رحمن نے پی ڈی ایم کے امیدوار یوسف رضا گیلانی کے کاغذات چیلنج کیے تھے جبکہ ان کے وکیل نے دلائل میں کہا تھا کہ یوسف رضا گیلانی کرپشن میں ملوث رہے ہیں اور سپریم کورٹ کی طرف سے بھی سزا یافتہ ہیں۔

پی ٹی آئی کے وکیل کا مزید کہنا تھا کہ سوئس حکومت کو خط نہ لکھ کر سپریم کورٹ کی توہین کی گئی اور وزیر اعظم کی حیثیت سے اپنے ہی حلف کی خلاف ورزی کی اور اس غیر قانونی عمل پر عمر بھر کیلیے نا اہلی بنتی ہے کیونکہ سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی آرٹیکل 62 ، 62 کے تحت اہل نہیں ہیں۔

وکیل کا مزید کہنا تھا کہ یوسف رضا گیلانی نے تسلیم کیا ان کے خلاف 26 کیسز زیر التوا ہیں، وہ آرٹیکل 63، 62 پر پورا نہیں اترتے، ان کیخلاف توشہ خانہ ریفرنس موجود ہے۔

جوابی دلائل میں سابق وزیراعظم کے وکیل نے موقف اپنایا کہ یوسف رضا گیلانی کو سپریم کورٹ نے علامتی سزا دی تھی، نااہلی کی مدت 2017 میں ختم ہو چکی ہے، کسی الزام یا زیر سماعت مقدمہ پر نااہلی نہیں بنتی۔ ریٹرنگ آفیسر نے دونوں وکلاء کے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کرلیا تھا جو آج سنا دیا گیا۔

You might also like

Comments are closed.