پیشمرگہ کو کرکوک سے نکلنے کی مہلت ختم

پیشمرگہ کو کرکوک سے نکلنے کی مہلت ختم

October 15, 2017 - 10:37
Posted in:

عراق کی مرکزی حکومت کی جانب سے کرد جنگجوؤں کو کرکوک کے متنازع علاقے چھوڑ دینے کی مبینہ مدت ختم ہو گئی ہے۔کرد سیکیورٹی حکام کا کہنا ہے کہ یہ مہلت اتوار کے روز صبح تک کے لیے دی گئی تھی لیکن عراقی حکام نے اس سے انکار کر دیا تھا۔چند اطلاعات ہیں کہ یہ حتمی مہلت اب 24 گھنٹوں تک بڑھا دی گئی ہے۔ * عراقی کردستان کے ریفرنڈم میں اکثریت آزادی کے حق میں* کرد آزادی چھوڑ دیں یا پھر بھوکے رہیں: اردوغانفریقین نے کرکوک میں دستے تعینات کر دیے ہیں اور کردوں اور حکومت حامی شیعہ ملیشیا کے درمیان چھوٹی جھڑپیں شروع ہو گئی ہیں۔

عراقی وزیرِ اعظم حیدر العبادی نے کرد تنظیم آر جی کو دھمکی دی تھی کہ وہ تین دن کے اندر اندر ہوائی اڈوں کا کنٹرول ان کے حوالے کر دیں ورنہ ہوائی ناکہ بندی کے لیے تیار ہو جائیں۔اس سے قبل وزیرِ اعظم عبادی نے ریفرینڈم کو 'غیر آئینی' قرار دیا تھا۔ سرکاری ٹیلی ویژن کے مطابق حیدر العبادی نے مطالبہ کیا کہ ترکی، شام اور ایران کے ساتھ تمام چوکیاں بغداد کی نگرانی میں دی جائیں۔اس سے پہلے ٹیلی ویژن پر خطاب میں کرد رہنما مسعود بارزانی نے وزیرِ اعظم عبادی پر زور دیا کہ وہ 'مذاکرات کا دروازہ بند نہ کریں کہ کیوں کہ مذاکرات ہی سے مسائل حل ہوں گے۔'

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}