نظام شمسی میں نویں سیارے کے شواہد

نظام شمسی میں نویں سیارے کے شواہد

October 16, 2017 - 10:44
Posted in:

نظام شمسی پر تحقیق کرنے والے ادارے کال ٹیک کے تحقیق دانوں کو ایسے ثبوت ملے ہیں جن کی بنیاد پر کہا جا سکتا ہے کہ نظام شمسی میں ایک اور سیارہ موجود ہے اور وہ خاصا بڑا ہے۔ایک اندازے کے مطابق یہ نیپچون کے حجم جتنا بڑا سیارہ ہے جو ہمارے سورج کے گرد چکر لگاتا ہے اور اس کا مدار پلوٹو سے خاصا دور ہے۔اس سیارے کو تحقیق دانوں نے 'پلینٹ نائن' کا نام دیا ہے اور یہ زمین کے مقابلے میں 10 گنا بڑا اور اس کا مدار سورج سے 20 گنا دور ہے۔ اسے سیارے کو سورج کے گرد اپنا ایک چکر مکمل کرنے میں 10 سے 20 ہزار سال لگتے ہیں۔سیارہ تلاش کریں اور اپنی مرضی کا نام دیں'بہت سے ستاروں سے زیادہ گرم' سیارہ دریافتاس اعلان کا مقصد یہ نہیں ہے کہ ہمارے نظام شمسی میں ایک نیا سیارہ ہے۔ خلا میں دور موجود اس سیارے کی موجودگی فی الحال نظریاتی حد تک پہنچ سکی ہے اور اب تک اس نویں سیارے کا مشاہدہ نہیں کیا جا سکا ہے۔ ماہر فلکیات اب اس سیارے کو نظام شمسی میں تلاش کررہے ہیں جس کی پیش گوئی تحقیق دانوں نے کی ہے۔

اگلا قدم کیا ہوگا؟خلا باز اب دنیا کی طاقتور ترین دور ببینوں کی مدد سے یہ پتہ لگانے کی کوشش کریں گے کہ پیش گوئی کے مطابق کیا کوئی سیارہ اپنے مجوزہ مدار میں موجود ہے یا نہیں۔ خلا میں موجود کوئی بھی چیز جو سورج سے خاصی دور ہو اس کا پتہ لگانا یا مشاہدہ کرنا انتہائی مشکل ہوتا ہے۔ لیکن سائنسدان سمجھتے ہیں کہ موجودہ خو ردبینوں کی مدد سے پلینٹ نائن کا مشاہدہ کیا جا سکتا ہے۔مائیک براؤن کہتے ہیں 'میں اسے تلاش کرنا چاہتا ہوں لیکن اگر کوئی اور اسے تلاش کرے تو بھی میں خود ہوں گا۔ اسی لیے ہم یہ تحقیق شائع کررہے ہیں۔ ہمیں امید ہے کہ دیگر لوگ بھی متاثر ہوں گے اور تلاش شروع کریں گے'۔جم گرین کہتے ہیں 'اگر پلینٹ ایکس وہاں موجود ہے تو ہم سب مل کر اسے تلاش کریں گے یا پھر جو معلومات ہمیں اب تک موصول ہوئی ہیں ان کی متبادل وضاحت پیش کریں گے، تو آئیے تلاش شروع کریں'۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}