مردان میں خواتین کےلیے مخصوص بس سروس

مردان میں خواتین کےلیے مخصوص بس سروس

April 04, 2019 - 19:05
Posted in:

پاکستان کے صوبے خیبر پختونخوا کے دوسرے بڑے شہر مردان میں پہلی مرتبہ خواتین کےلیے مخصوص بس سروس کا آغاز کردیا گیا ہے۔ ’پنک یا سکورہ بس‘ کے نام سے یہ مخصوص سروس صرف مردان شہر میں چلائی جائے گی اور جس میں صرف عورتیں اور 12 سال سے کم عمر بچے سفر کرسکیں گی۔ مردان کے بعد اس بس سروس کا آغاز ایبٹ آباد شہر میں بھی کیا جائے گا جس کےلیے تمام تر تیاریاں مکمل کرلی گئی ہے۔ توقع ہے کہ اگلے مہینے اس کا افتتاح ہو جائے گا۔نامہ نگار رفعت اللہ اورکزئی کے مطابق جاپان کے تعاون سے شروع کیے جانے والے اس منصوبے پر کل ایک اعشاریہ چھ ملین امریکی ڈالر کی لاگت آئی ہے جبکہ اس کےلیے انفراسٹرکچر بنانے کا کام اقوام متحدہ کے ایک ادارے یو این او پی ایس کی طرف سے کیا گیا ہے۔

ایک سوال کے جواب میں پراجیکٹ منیجر نے کہا کہ یہ پائلٹ منصوبہ ہے لیکن اگر مزید بسوں کی ضرورت محسوس کی گئی تو اس میں مزید اضافہ کیا جاسکتا ہے۔ بسوں کی دیکھ بھال اور مرمت کی ذمہ داری خیبر پختونخوا حکومت کے ادارے ٹرانس پشاور کو دی گئی ہے۔ خیال رہے کہ پنک یا سکورہ بس منصوبے پر دستخط گذشتہ سال مئی کے مہینے میں کئے گئے تھے تاہم بی آر ٹی پر تعمیراتی کام کا آغاز ہوجانے کی وجہ سے یہ منصوبہ تعطل کا شکار ہوگیا تھا۔ ماضی میں پشاور میں بھی پبلک ٹرانسپورٹ میں خواتین کے لیے ایک مخصوص حصہ مختص کرنے کا تجربہ کیا گیا تھا لیکن وہ ناکام ہوگیا تھا۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}