سی پیک پر نظر ثانی یا کمزور کرنے کی کوشش جا ری ہے ، رضاربانی

سی پیک پر نظر ثانی یا کمزور کرنے کی کوشش جا ری ہے ، رضاربانی

October 01, 2018 - 22:05
Posted in:

سینیٹر رضا ربانی نے کہا کہ سی پیک پر نظر ثانی یا اسے کمزور کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے، خبر ہے سی پیک منصوبوں کی تفصیلات آئی ایم ایف کو دی جا رہی ہیں ۔ سینیٹر حاصل بزنجو نے کہا کیا حکومت کو سعودی، ایران تنازع کا علم نہیں ؟ وفاقی حکومت یہ معاہدہ نہیں کر سکتی ۔سینیٹ میں اپوزیشن نےسعودی عرب کو سی پیک میں شامل کرنے اور ریکوڈک منصوبہ دینے پراپنے تحفظات کا اظہار کردیا ۔سینیٹ میں منی بجٹ پر بحث کے دوران سینیٹر رضا ربانی نے کہاکہ امید ہے کہ اگلے بجٹ پر نیا این ایف سی ایوراڈ آ چکا ہو گا، خبر ہے سی پیک منصوبوں کی تفصیلات پاکستان آئی ہوئی آئی ایم ایف کی ٹیم کو دی جارہی ہے۔انہوں نےکہا کہ ایسا لگتا ہے حکومت سی پیک کے منصوبوں پر نظر ثانی کر رہی ہے ، بتایا جائے کیا سعودی عرب کی سی پیک میں شمولیت پر چین سے بات کی گئی ، ان کا کیا جواب تھا؟ تاثر مل رہا ہے کہ چین نہ چاہتے ہوئے بھی یہ ماننے کو تیار ہے۔رضا ربانی نے کہا کہ گوادر میں سعودی عرب کو آئل ریفائنری لگانے کی پیشکش ایک معاشی فیصلہ ہی نہیں، بہت اہم فیصلہ ہے ، سعودی عرب کس بلاک میں ہے ؟ انہوں نے کہا کہ ریکوڈک منصوبہ بھی سعودی عرب کو دینے کی بات کی جا رہی ہے، کیا اس معاملے پر صوبہ بلوچستان کو اعتماد میں لیا گیا، یہ تو آئین کی خلاف ورزی ہے ۔ نیشنل پارٹی کے سینیٹر حاصل بزنجو نے سعودی آئل ریفائنری اور ریکوڈک پر بات کرتے ہوئے کہا کیا حکومت بلوچستان اور صوبائی اسمبلی ختم ہو گئی ہے ، یا عوام مر گئے ہیں جو بلوچستان کے فیصلے وفاقی حکومت کر رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ آپ بلوچستان کو شورش زدہ علاقہ بنانے جا رہے ہیں، کیا آپ کو سعودی، ایران تنازع کا علم نہیں ؟ وفاقی حکومت یہ معاہدہ نہیں کر سکتی ،، ان معاملات پر نیشنل پارٹی کے سینٹرز پارلیمنٹ کے باہر ہر روز ایک گھنٹے دھرنا دیں گے۔بشکریہ جنگbody {direction:rtl;} a {display:none;}