امریکہ: ایک شخص نے مسافر طیارہ چوری کر کے گرا دیا

امریکہ: ایک شخص نے مسافر طیارہ چوری کر کے گرا دیا

August 12, 2018 - 00:33
Posted in:

امریکی شہر سیئیٹل سے ایک ہوائی کمپنی کے ملازم نے ایک خالی جہاز چرا کر اسے ایک قریبی جزیرے میں گرا کر تباہ کر دیا اور خود بھی ہلاک ہو گیا۔ حکام کے مطابق اس شخص نے جمعے کی رات کو بغیراجازت جہاز اڑایا جس کی وجہ سے ہوائی اڈا وقتی طور پر بند کرنا پڑا۔ دو ایف 15 لڑاکا طیاروں نے اس جہاز کا پیچھا کیا، جو بعد میں ایک جزیرے میں گر کر تباہ ہو گیا۔ مقامی شیرف کے دفتر نے بتایا کہ 'یہ دہشت گرد واقعہ نہیں تھا،' اور یہ 29 سالہ شخص مقامی شہری تھا۔ شیرف پال پیسٹر نے بعد میں نامہ نگاروں کو بتایا کہ 'اکثر دہشت گرد پانی کے اوپر کرتب نہیں دکھایا کرتے۔' 76 مسافروں کی گنجائش والا یہ بمبارڈیئر کیو 400 جہاز ہرائزن ایئر نامی ہوائی کمپنی کی ملکیت تھا اور یہ مقامی وقت کے مطابق رات آٹھ بجے فضا میں بلند ہوا۔

یہ شخص پہاڑوں کے نظاروں کے بارے میں بھی بات کرتا ہے اور یہ بھی پوچھتا ہے کہ اگر اس نے کامیابی سے جہاز اتار لیا تو کیا اسے ہوائی کمپنی پائلٹ کی نوکری دے دے گی؟ عینی شاہدوں نے جہاز کو کرتب دکھاتے اور قلابازیاں کھاتے دیکھا۔ ایک شخص نے بتایا کہ ایک موقعے پر جہاز پانی کی سطح سے صرف سو فٹ دور رہ گیا تھا لیکن پھر ہوا میں بلند ہو گیا۔ ہوابازی کے ماہر ڈیوڈ گلیو نے بی بی سی کو بتایا کہ اس قسم کے جہازوں میں چابیاں نہیں ہوتیں اور اگر کوئی ان میں داخل ہو جائے تو انھیں اڑانا زیادہ مشکل نہیں ہوتا۔ 'تاہم انھیں اتارنا اصل مسئلہ ہوتا ہے۔'ایف بی آئی نے اس واقعے کی تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}