’زلزلے سے بلڈنگ ہوا میں جھولنے لگی‘

’زلزلے سے بلڈنگ ہوا میں جھولنے لگی‘

November 13, 2017 - 15:29
Posted in:

سات اعشاریہ تین کی شدت سے ایران اور عراق کے سرحدی علاقوں میں آنے والے زلزلے کے نتیجے میں صرف ایران میں 70 ہزار افراد متاثر ہوئے ہیں۔آفٹر شاکس کے امکان کی وجہ سے سرد موسم کے باوجود مکین گھروں سے باہر رہنے پر مجبور ہیں۔ایران، عراق میں زلزلے سے 200 سے زیادہ ہلاک، پانچ ہزار زخمیخبر رساں ادارے روئیٹرز کے مطابق ایران میں سب سے زیادہ متاثر ہونے والا صوبہ کرمانشاہ ہے جہاں تین روزہ سوگ کا اعلان کیا گیا۔ ایرانی حکام کا کہنا ہے کہ یہ زلزلہ راوں برس کا شدید ترین زلزلہ تھا۔ جب زلزلہ آیا تو متاثرہ علاقوں کی مساجد میں اذان دی جانے لگی۔ ایران کی سرحد کے دوسری جانب بغداد میں مجیدہ امیرنے خبررساں ادارے روئیٹرز کو بتایا کہ 'میں اپنے بچوں کے ساتھ رات کا کھانا کھا رہی تھی کہ بلڈنگ ہوا میں جھولنے لگی۔‘وہ کہتی ہیں کہ پہلے میں نے سمجھا کہ کوئی بہت بڑا دھماکہ ہوا ہے لیکن پھر ہر جانب ہر کوئی چلانے لگا زلزلہ۔'

ترکی اور اسرائیل کے میڈیا کے مطابق وہاں بھی زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے تاہم فوری طور پر کسی نقصان کی اطلاع موصول نہیں ہوئی۔ ترک ریڈ کریسنٹ کے چئیرمین کریم کینیک نے نشریاتی ادارے این ٹی وی کو بتایا کہ اربل میں موجود ان کی ٹیم دیگر اداروں کے ساتھ مل کر عراق کے متاثرہ علاقوں میں جارہی ہے۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}