’ابو زندہ ہوتے تو یہ جیکٹ ان کے لیے خریدتی‘

’ابو زندہ ہوتے تو یہ جیکٹ ان کے لیے خریدتی‘

November 13, 2017 - 20:59
Posted in:

کبھی کبھار چھوٹی اور معمولی باتیں گہرے غم اور صدمے کی یاد دلا دیتی ہیں۔ریچل پرائر کے لیے وہ چیز مارکس اینڈ سپینسر دکان میں لٹکی ہوا شوخ لال رنگ کی جیکٹ تھی جسے دیکھ کر انھیں اپنے والد لینٹن کی یاد آئی جن کا دس برس قبل انتقال ہو گیا تھا۔ریچل پرائر جو اپنے شوہر اور بچوں کے ساتھ خریداری کر رہی تھیں، بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہتی ہیں کہ 'میں نے اس لال جیکٹ جو دیکھا تو مجھے محسوس ہوا کہ میرے والد اسے بہت پسند کرتے۔ میں اسے ان کے لیے خرید لیتی اور میں ان کو اپنے تصور میں یہ جیکٹ پہنے دیکھتی۔'

@ORachaelO کی ٹوئٹر پر پوسٹ کا خاتمہ