ڈبلن ٹیسٹ: پاکستان کی پانچ وکٹوں سے جیت

ڈبلن ٹیسٹ: پاکستان کی پانچ وکٹوں سے جیت

May 15, 2018 - 19:52
Posted in:

پاکستان کی جانب سے امام الحق 74رنز کے ساتھ نمایاں رہے اور آؤٹ نہیں ہوئے۔ میچ کا تفصیلی سکور کارڈ160 رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستان کا آغاز اچھا نہ تھا اور صرف 14 کے مجموعی سکور پر اس کی تین وکٹیں گر چکی تھیں۔اظہر علی دو، حارث سہیل سات اور اسد شفیق ان رن بنا کر آؤٹ ہوئے۔ تاہم اس کے بعد اپنا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلنے والے امام الحق اور بابر اعظم نے ذمہ دارانہ کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنی ٹیم کو فتح سے ہمکنار کروانے میں کلیدی کردار ادا کیا۔ بابر اعظم 59 رنز بنا کر رن آؤٹ ہوئے تو پاکستانی ٹیم فتح سے صرف 20 رنز کی دوری پر تھی۔ اس کے بعد آنے والے بلے باز سرفراز احمد صرف آٹھ رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ آئرلینڈ ‌کی جانب سے مرتاغ نے دو جبکہ ٹامسن اور رینکن نے ایک، ایک وکٹ حاصل کی۔

اس سے قبل ٹیسٹ میچ کے پانچویں روز آئرلینڈ کی ٹیم 339 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی۔ آئرلینڈ کی اننگز کی خاص بات کیون اوبرائن کی عمدہ سنچری تھی جنھوں نے 118 رنز کی اننگز کھیلی۔ اس کے علاوہ ٹامسن 53 اور جوئس 43 رنز کے ساتھ نمایاں رہے۔ اسی بارے میں مزید خبریںڈبلن ٹیسٹ: آئرلینڈ کی بیٹنگ لائن ریت کی دیوار ثابت ہوئیڈبلن ٹیسٹ کا دوسرا دن شاداب اور فہیم اشرف کے نامآئرلینڈ کے خلاف میچ ہو اور 2007 کا ورلڈ کپ ذہن میں نہ آئےپاکستان بمقابلہ آئرلینڈ: ’تاریخ نہ دہرانے کا سنہری موقع‘دوسری اننگز میں پاکستان کی جانب سے محمد عباس نے پانچ، محمد عامر نے تین اور شاداب خان نے ایک وکٹ حاصل کی۔ خیال رہے کہ پاکستان کی ٹیم نے پہلی اننگز میں آئرلینڈ کو 130 رنز پر آؤٹ کرنے کے بعد فالو آن پر مجبور کر کے دوبارہ بیٹنگ کی دعوت دی تھی لیکن ناقص فیلڈنگ اور چند متنازع فیصلوں کے بعد آئرلینڈ کی ٹیم 160 رنز کا ہدف دینے میں کامیاب رہی تھی۔آئرلینڈ کے خلاف ٹیسٹ میچ کے بعد اب پاکستان 24 مئی سے انگلینڈ کے خلاف دو ٹیسٹ میچوں کی سیریز کھیلے گا اور تین ٹی 20 میچ سکاٹ لینڈ میں کھیلے گا۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}