واٹر کمیشن نے صدر میں فوڈ اسٹریٹ پر کام رکوادیا تنازع حل کرنے کیلئے کمیٹی تشکیل

واٹر کمیشن نے صدر میں فوڈ اسٹریٹ پر کام رکوادیا تنازع حل کرنے کیلئے کمیٹی تشکیل

October 11, 2018 - 23:53
Posted in:

کراچی( اسٹاف رپورٹر) واٹر کمیشن کے سربراہ جسٹس ر امیر ہانی مسلم نے صدر فوڈ اسٹریٹ پر کام روکنے کا حکم دیتے ہوئے فوکل پرسن آصف شاہ کی سربراہی میں تنازع حل کرنے کے لیے کمیٹی بنادی۔ عدالت عظمی ٰکے حکم پر قائم واٹر کمیشن کا اجلاس جسٹس(ر) امیر ہانی مسلم کی سربراہی میں ہوا۔ کمیشن کے روبرو صدر فوڈ اسٹریٹ کا معاملہ زیر غور آیا۔ کراچی پولیس چیف امیر شیخ، ڈی جی ایس بی سی اے افتخار قائمخانی، میونسپل کمشنر سمیت دیگر حکام پیش ہوئے۔ کمیشن نے کہا کہ گھر کے باہر سے صفائی کر نہیں سکتے باتیں فوڈ اسٹریٹ کی کررہے ہیں، ڈی ایم سی ساؤتھ بری طرح ناکام ہوا ہے، آپ لوگوں کو اتنی توفیق نہیں کہ سندھ ہائی کورٹ اور اطراف سے ہی گندگی اٹھوالیں۔ میونسپل کمشنر نے کہا کہ منصوبہ2012ء میں بنایا گیا تھا ابھی پہلا فیز مکمل ہوچکا ہے۔ کمیشن نےریمارکس دیے آپ نے ٹھیلے کھڑے کردیے ، میں ہٹا رہا ہوں اور آپ لگوا رہے ہیں،بحث نہ کریں ورنہ آپ کو ابھی گاڑی میں بیٹھا کر لے جاؤں گا۔ فوڈ اسٹریٹ اورآس پاس کے رہائشیوں کا سیوریج کہاں جائے گا۔ ہم سٹرکیں کھلوا رہے ہیں، آپ مزید مصیبت کھڑی کر رہے ہیں، آپ لوگوں کے بنیادی حقوق سلب کر رہے ہیں۔ سیکرٹری بلدیات بتائیں کس قانون کے تحت فوڈ اسٹریٹ بنائی۔ کمیشن میں موجود صدر کے دکانداروں نے کہا کہ یہ چائنہ کٹنگ کی نئی شکل ہے ہمارا برا حال ہے، دوکانوں کے سامنے رکاوٹیں قائم کر دیں، معاملہ نیب کو بھیجا جائے، صدر سے بھتا خوری ہو رہی ہے۔ کنسلٹنٹ نے کمیشن کو بتایا کہ جہانگیر پارک منصوبے کا ہی حصہ ہے۔ جسٹس (ر) امیر ہانی مسلم نے کہا کہ کل آپ صدر کی مین سٹرک پر بھی فوڈ اسٹریٹ بنا دیں گے،آپ لیاقت آباد میں فوڈ اسٹریٹ بنا کر دیکھائیں۔ ضلع جنوبی کا انفراسٹرکچر تباہ کر دیا، ہفتوں ہفتوں گند نہیں اٹھایا جاتا،مفاد عامہ میں کسی بھی تجاوزات کو گرانا پڑا تو گرائیں گے۔ اگر فوڈ اسٹریٹ بنانی ہے تو دوکانیں خریدیں اور ان میں بنائیں۔ سڑک کے بیچ میں کسی صورت فورڈ اسٹریٹ نہیں بنانے دیں گے۔ جسٹس( ر) امیر ہانی مسلم نے کہا کہ کروڑ پتی خاندان سے نہیں بسوں میں سفر کرتے زندگی گزری۔ آپ لوگوں نے تو کبھی بسوں میں سفر نہیں کیا ہوگا۔ اب تو ماسٹر پلان نوٹیفائی ہوگیا، آپ اب فارغ ہوں گے۔ 3 کروڑ خرچ کیے، حساب دینا ہوگا۔ واٹر کمیشن کے سربراہ جسٹس( ر) امیر ہانی مسلم نے صدر فوڈ اسٹریٹ پر کام روک دیا۔ کمیٹی کو فوکل پرسن آصف شاہ کی سربراہی میں تنازع حل کرنے کی ہدایت کردی۔
بشکریہ جسارتbody {direction:rtl;} a {display:none;}