سینٹرل کنٹریکٹ: بابر اعظم کی ترقی، حفیظ کی تنزلی

سینٹرل کنٹریکٹ: بابر اعظم کی ترقی، حفیظ کی تنزلی

August 06, 2018 - 19:00
Posted in:

پاکستان کرکٹ بورڈ نے اس سال 23 کرکٹرز کو سینٹرل کنٹریکٹ دینے کا اعلان کردیا ہے جن میں سے چھ کرکٹرز کو اے کیٹیگری میں شامل کیا ہے۔سینٹرل کنٹریکٹ کی رقم میں اضافہ کرنے کے ساتھ ساتھ کھلاڑیوں کو ٹیسٹ، ون ڈے اور ٹی 20 میں دی جانے والی میچ فیس میں بھی اضافہ کردیا گیا ہے۔اس سال سینٹرل کنٹریکٹ میں اے کیٹگری پانے والے کرکٹرز کو پونے نو لاکھ روپے ملیں گے۔بی کیٹیگری کے کرکٹر کو تقریباً ساڑھے پانچ لاکھ روپے، سی کیٹیگری کے کرکٹر کو پونے چار لاکھ روپے جبکہ ڈی کیٹیگری کے کرکٹر کو تقریباً دو لاکھ روپے اور پہلی بار متعارف کرائی جانے والی ای کیٹیگری کے کرکٹر کو تقریباً ایک لاکھ روپے ملیں گے۔اے کیٹگری میں شامل کرکٹر کو ٹیسٹ میچ کا معاوضہ ساڑھے گیارہ لاکھ روپے ملے گا۔پاکستان کرکٹ بورڈ نے اس سال چھ کرکٹرز کو اے کیٹگری میں شامل کیا ہے جن میں کپتان سرفراز احمد، اظہرعلی، شعیب ملک، محمد عامر،یاسر شاہ اور بابراعظم شامل ہیں۔بابراعظم گذشتہ سینٹرل کنٹریکٹ میں بی کیٹگری میں تھے جبکہ محمد حفیظ کو اس سال اے سے ہٹا کر بی کیٹیگری میں رکھا گیا ہے۔

بی کیٹگری کے کرکٹرز میں محمد حفیظ، فہیم اشرف، اسد شفیق، حسن علی، فخرزمان اور شاداب خان شامل ہیں۔سی کیٹگری محمد عباس، وہاب ریاض، جنید خان، حارث سہیل، امام الحق، محمد نواز، عثمان خان شنواری، شان مسعود اور عماد وسیم پر مشتمل ہے۔ڈی کیٹگری میں رومان رئیس، آصف علی، راحت علی، عثمان صلاح الدین اور حسین طلعت شامل ہیں۔پہلی بار متعارف کردہ ای کیٹگری میں بلال آصف، سعد علی، محمد رضوان، شاہین آفریدی، صاحبزادہ فرحان، عمید آصف اور میر حمزہ شامل ہیں۔احمد شہزاد جو گذشتہ سینٹرل کنٹریکٹ میں سی کیٹگری میں شامل تھے ڈوپنگ میں معطلی کی وجہ سے اس بار سینٹرل کنٹریکٹ میں جگہ بنانے میں کامیاب نہیں ہوسکے ہیں۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}