دوست ملک اور آئی ایم ایف سے قرض لینے میں کیا فرق ہے؟

دوست ملک اور آئی ایم ایف سے قرض لینے میں کیا فرق ہے؟

November 08, 2018 - 19:21
Posted in:

آپ نے زندگی میں کبھی نہ کبھی ادھار تو مانگا ہو گا۔ دوستوں سے بھی اور شاید والد صاحب سے بھی؟ اس موقعے پر دونوں کے رویے میں کچھ فرق محسوس کیا؟ دوست نے شاید بغیر سوال و جواب کے پیسے دے دیے ہوں گے (اگر اس کے پاس ہوئے) لیکن والد صاحب کا اس وقت رویہ کیسا تھا؟ ’پہلے جو پیسے دیے تھے ان کا کیا کِیا؟ تم بہت فضول خرچ نہیں ہو گئے؟‘کیا پیسے مانگنے پر والد صاحب کے ان سوالوں کا سامنا کرنا پڑا؟ آج کل حکومت پاکستان کو اسی طرح کے سوالات کا سامنا ہے۔ بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کا ایک وفد ان دنوں پاکستان میں ہے جہاں وہ حکومت کی قرض کے حصول کی درخواست پر مذاکرات کر رہا ہے۔ ان مذاکرات میں کیا کچھ ہوتا ہے اور آئی ایم ایف کا قرض دینے کا طریقہ کار ہے کیا؟

اسی بنا پر وزیراعظم عمران خان کی کوشش رہی ہے کہ آئی ایم ایف کے بجائے کسی دوست ملک سے ضرورت کا کچھ قرض لے لیا جائے تاکہ ان کڑی شرائط سے کسی حد تک بچا جا سکے۔ یہی فرق ہے کسی دوست ملک سے قرض مانگنے اور آئی ایم ایف کے پاس قرض کی درخواست لے کر جانے میں۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}