جنگلی حیات کےدل موہ لینے والے انداز

جنگلی حیات کےدل موہ لینے والے انداز

February 14, 2018 - 06:53
Posted in:

جنگلی حیات کا تحفظ کرنے والے ایک کارکن کی بانہوں میں گوریلے کی یہ خوبصورت تصویر وائلڈ لائف فوٹوگرافر آف دی ایئر پیپلز چوائس ایوارڈ کی فاتح قرار دی گئی ہے۔

یہ تصویر کینیڈین فوٹوگرافر جو این مک آرتھر نے بنائی تھی اور اس میں ایک پیکن نامی مادہ گوریلے کو دیکھا جا سکتا ہے جسے ایپ ایکشن افریقہ تنظیم نے غیرقانونی شکاریوں سے پچایا تھا۔ اس تصویر میں وہ اپنی نگران اپولینیئر ندوہودو کی گود میں ہے اور اسے کیمرون میں ایک چھوٹے حفاظتی پناہ گاہ سے ایک بڑے محفوظ جنگلی علاقے میں پہنچایا جا رہا ہے۔ مک آرتھر کہتے ہیں: ’میں بہت شکرگزار ہوں کہ اس تصویر نے لوگوں کو متاثر کیا ہے اور میں امید کرتا ہوں کہ اس سے جانوروں کی تھوڑی مزید دیکھ بھال کرنے کا خیال اجاگر ہوگا۔‘ ’میں باقاعدگی سے ہمارے ہاتھوں جانوروں پر ہونے والے مظالم کو ڈاکومنٹ کرتا ہوں، لیکن بعض اوقات میں ان کو بچانے، امید اور آزادی کی کہانیوں کا عینی شاہد بھی بنتا ہوں۔‘ اس تصویر کو 24 منتخب تصاویر میں سے تقریباً 20 ہزار مداحوں نے پسند کیا تھا جنھیں نیچرل ہسٹری میوزیم نے سنہ 2017 کے مقابلے کے لیے 50 ہزار انٹریز سے منتخب کیا تھا۔

فائنلسٹ: بغل گیریڈیبرا گارسائیڈ، کینیڈا

قطبی ریچھ اوران کے بچے جب خزاں کے آغاز کے دنوں میں اپنے آماجگاہوں سے باہر آتے ہیں تو بچے اپنے ماؤں کے قریب ہی رہتے ہیں تاکہ وہ گرم بھی رہیں اور محفوظ بھی۔ ڈیبرا گارسائیڈ نے کینیڈا کے علاقے منیٹوبا میں واقع ویپسک نیشنل پارک میں اس خاندان کی آماجگاہ کے قریب چھ دن تک انتظار کیا اور بالآخر ریچھ باہر آئے۔ سخت ترین موسم میں جب درجہ حرارت منفی 35 سے منفی 55 سینٹی گریڈ کے درمیان تھا اور تیز ہوائیں چل رہی تھیں، گارسائیڈ نے یہ منظر فلم بند کیا۔

فائنلسٹ: رولر رائیڈلکشتھا کرونارتھنے، سری لنکا

لکشیتھا کرونارتھنے کینیا کے ماسئے مارا نیشنل ریزرو میں سفاری سے لطف اندوز ہورہے تھے جب انھوں نے ایک غیرمعمولی منظر دیکھا۔ ایک لیلک بریسٹڈ رولر نامی پرندہ ایک زیبرا کی سواری کر رہا تھا۔ اس رنگین پرندے نے ایک گھنٹے سے زیادہ یہ سواری کی اور کبھی کبھار کوئی کیڑا بھی کھا لیتا جبکہ کرونارتھنے نے اس منظر کو فلم بند کرنے کے لیے صحیح وقت کا انتظار کیا۔

فائنلسٹ: لٹکتا ہوا کاہل ریچھ لوسیانو کینڈیسانی، برازیل

لوسیانو کینڈیسانی برازیل میں ہاہیا کے مقام پر واقع اٹلانٹنگ برساتی جنگل میں ایک درخت پر چڑھے تاکہ وہ تین پنچوں والے اس سلوتھ (جسے کاہل ریچھ بھی کہا جاتا ہے) کی تصویر بنا سکیں۔ سلوتھ عموماً درختوں کے پتوں پر گزارا کرتے ہیں اور اکثر بلندوبالا درختوں پر پائے جاتے ہیں۔

فائنلسٹ: خوش اسلوب ماں اور بچہ رے چن، تائیوان

ہر سال جولائی سے اکتوبر کے اواخر تک کبڑی وہیل انٹارکٹک سے شمال کی جانب نقل مکانی کرتی ہیں تاکہ وہ گرم پانیوں میں بچے جنم دے سکیں۔ رے چن نے ایسی ہی ایک وہیل کو اپنے بچے کے ساتھ واویو ٹونگا کے جزائر کے قریب دیکھا۔ جیسے ہی وہ ایک دلفریب موڑ مڑیں چن نے یہ تصویر بنا لی۔ بعدازاں انھوں نے اسے بلیک اینڈ وائٹ کر دیا اور ان کے مطابق اس سے اس منظر کی سادگی مزید ابھر کے سامنے آئی۔

وائلڈ لائف فوٹوگرافر آف دی ایئر نیچرل ہسٹری میوزیم کا سالانہ مقابلہ ہے جس میں قدرتی مناظر اور فوٹوجرنلز سے متعلق دنیا کے بہترین تصاویر پیش کی جاتی ہیں۔ وائلڈ لائف فوٹوگرافر آف دی ایئر کی فاتح تصاویر کی نمائش لندن کے نیچرل ہسٹری میوزیم میں 28 مئی 2018 تک جاری رہے گی۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}