امریکہ میں فائرنگ: پانچ خونریز حالیہ واقعات

امریکہ میں فائرنگ: پانچ خونریز حالیہ واقعات

November 08, 2018 - 18:21
Posted in:

امریکہ میں فائرنگ کے واقعات میں بڑے پیمانے پر لوگوں کی ہلاکت کی خبریں معمول بنتی جا رہی ہیں۔ اس کی ایک بڑی وجہ یہ ہے کہ امریکہ میں کسی بھی دوسرے ملک کے مقابلے پر سب سے زیادہ بندوقیں اور پستول پائے جاتے ہیں۔ ذاتی اسلحے کے حق میں سرگرم تنظیم نیشنل رائفل ایسوسی ایشن ایسی قانون سازی کی مخالفت کرتی رہی ہے جس میں اسلحے پر کسی بھی قسم کی پابندیاں لگائی جائیں۔ بہت سے امریکہ اسلحہ رکھنا اپنا آئینی حق سمجھتے ہیں۔ ذیل میں حالیہ برسوں میں پیش آنے والے فائرنگ کے کچھ واقعات کا تذکرہ کیا جا رہا ہے جن میں بڑے پیمانے پر جانیں ضائع ہوئیں۔

5 کیلی فورنیا، دو دسمبر، 2015ہلاکتیں: 16 ریاست کیلیفورنیا کے شہر سان برنانڈینو کے ایک سوشل سروس سینٹر میں پاکستانی نژاد میاں بیوی رضوان فاروق اور تاشفین ملک نے فائرنگ کر کے 14 افراد کو ہلاک کر دیا۔ بعد میں پولیس سے فائرنگ کے تبادلے میں دونوں حملہ آوروں کو بھی ہلاک کر دیا گیا۔ذہنی مسائل اور بیماریوں کا شکار افراد کی مدد کے مرکز میں فائرنگ کرنے والے یہ دونوں افراد خودکار رائفلوں سے مسلح اور جنگی لباس میں ملبوس تھے۔

BBCUrdu.com بشکریہbody {direction:rtl;} a {display:none;}