’ٹرمپ کی ٹویٹ یہود دشمنی پر مبنی تھی‘

Printer-friendly versionSend by emailPDF version

’ٹرمپ کا ٹویٹ یہود دشمنی پر مشتمل تھا‘

ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ ذرائع ابلاغ کی جانب سے اس کا سٹار آف ڈیوڈ کے ساتھ موازنہ ’بدیانتی‘ پر مشتمل ہے

امریکہ میں رپبلکن پارٹی کی ممکنہ صدارتی امیدوار ہیلری کلنٹن کا کہنا ہے کہ ان کے حریف ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر چھ کونوں والے ستارے پر مشتمل ایک ٹویٹ ’واضح طور پر یہود دشمنی‘ پر مبنی تھا۔اس ٹویٹ میں سٹار آف ڈیوڈ سے ملتی جلتی ایک شکل اور نقدی کے ڈھیر کے ساتھ ہیلری کلنٹن کو ’بدعنوان ترین امیدوار‘ بیان کیا گیا تھا۔٭ ای میلز کے بارے میں، ایف بی آئی کی ہیلری کلنٹن سے پوچھ گچھ٭ سینڈرز کا انتخابات میں ہلیری کو ووٹ دینے کا اعلاناس پوسٹ کو بعد ازاں حذف کر دیا گیا اور اس نعرے کو ستارے کے بجائے دائرے کے ساتھ دوبارہ پوسٹ کیا گیا۔ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ ذرائع ابلاغ کی جانب سے اس کا یہودیت کی علامت سٹار آف ڈیوڈ کے ساتھ موازنہ ’بدیانتی‘ پر مشتمل ہے۔دی مائیک ویب سائٹ کا کہنا ہے کہ یہ تصویر پہلی بار یہود دشمنی اور سفید فام بالادستی پر مبنی ایک میسج بورڈ پر دیکھا گیا تھا۔ہیلری کلنٹن کی مہم ٹیم نے امریکہ میڈیا کو بتایا ’ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے نسلی تعصب والی ویب سائٹس کے ذریعے یہود دشمنی والی تصاویر کا کھلم کھلا استعمال خاصا پریشان کن ہے۔‘اپنے ردعمل میں ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ یہ ایک ’عام سا ستارہ تھا، جو عام طور پر پولیس اہکار استعمال کرتے ہیں‘ اور یہود دشمنی کے الزامات ’مضحکہ خیز‘ ہیں۔انھوں نے ہیلری کلنٹن پر اپنے شوہر کی امریکی اٹارنی جنرل سے ملاقات کے معاملے سے توجہ ہٹانے کے لیے ایسا کرنے کا الزام عائد کیا۔خیال رہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ اس سے پہلے سوشل میڈیا پر نسلی تعصبانہ خیالات کی پذیرائی کرنے پر تنقید کا نشانہ بن چکے ہیں۔رواں سال کے آغاز میں کو کلس کلان نامی گروہ کے سربراہ ڈیوڈ ڈیوک نے ڈونلڈ ٹرمپ کی تعریف کی تھی جس سے ان کی جانب سے فوراً لاتعلقی کا اظہار نہ کرنے پر ڈونلڈ ٹرمپ پر کڑی تنقید کی گئی تھی۔

BBCUrdu.com بشکریہ